کراچی، ثانوی تعلیمی بورڈ کراچی کی عدم دلچسپی کے باعث نویں جماعت سائنس میں مقررہ عمر سے زائد ہزاروں امیدواروں کے انرولمنٹ فارم اور امتحانی فارم جمع کر لیے گئے جنہیں بورڈ نے منسوخ کر دیا ہے۔ بورڈ نے گزشتہ سال اپنے بورڈ آف گورنرز کے ذریعے فیصلہ کیا تھا کہ سائنس ریگولر نویں جماعت کے لیے عمر کی شرط 20 سال سے کم ہو گی مگر اسکولوں نے 20 سال سے زائد عمر کے پہلے انرولمنٹ فارم جمع کرائے اور پھر امتحانی فارم بھی جمع کرادیئے۔ بورڈ کا عملہ بروقت انہیں چیک نہیں کر سکا، اس طرح امیدواروں کے لاکھوں روپے ضائع ہو گئے۔ بورڈ کی سیکریٹری حور مظہر کے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق درجہ نہم سائنس و جنرل گروپ ریگولر میں شرکت کے لیے امیدواروں کی زیادہ سے زیادہ عمر 20 سال مقرر ہے جس کی اطلاع بورڈ سے الحاق شدہ گورنمنٹ اور پرائیویٹ اسکولوں کو بذریعہ سرکلر دی جاچکی ہے لیکن اس کے باوجود بھی بعض اسکولوں کی جانب سے کلاس نہم سائنس و جنرل گروپ ریگولر امتحان برائے 2012 میں شرکت کیلئے 20 سال سے زیادہ عمر کے امیدواروں کے انرولمنٹ فارم و امتحانی فارم بھی جمع کروا دیئے گئے ہیں جو کہ بورڈ نے منسوخ کر دیئے ہیں۔ ایسے اسکولوں کے سربراہوں سے گزارش ہے کہ وہ اپنے مجاز نمائندوں کے ذریعے اپنے امیدواروں کے منسوخ شدہ انرولمنٹ فارم و امتحانی فارم بورڈ ہذا کے اکانٹ سیکشن کے کانٹر نمبر 14، 15 اور 16 سے جمع شدہ انرولمنٹ فارم و امتحانی فارم کی فیس کی رسید دکھا کر 31 جنوری تک حاصل کر لیں۔ سیکریٹری کے مطابق 20 سال سے زیادہ عمر کے امیدوار صرف درجہ نہم جنرل گروپ پرائیویٹ کے امتحان میں شرکت کرنے کے اہل ہیں جس کے لیے تمام ضروری کارروائیوں کا مکمل کرنا ضروری ہے۔